ڈیم تعمیر کی براہ راست نگرانی کون کریگا, وزیراعظم عمران خان یا چیف جسٹس ثاقب نثار

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )سپریم کورٹ آف پاکستان نے ملک میں ڈیمز کی تعمیر کے حوالے سے انقلابی قدم اٹھاتے ہوئے ڈیمز کی تعمیر کیلئے فنڈ قائم کیا ہے اور اس حوالے سے چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار کو ملک میں بسنے والے پاکستانیوں ہی نہیں بلکہ بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کی جانب سے بھی شاندار خراج تحسین پیش کیا گیا۔ چیف جسٹس آف پاکستان نے ڈیمز کی فوری تعمیر کیلئے قوم میں ایک نیا جذبہ بیدار کر دیا ہے اور چیف جسٹس کی جانب سے گاہے بگاہے ڈیمز کی تعمیر کیلئے آنیوالے بیانات کو پوری قوم کی حمایت حاصل ہے۔ وزیراعظم عمران خان بھی ڈیمز کی تعمیر کیلئے چیف جسٹس کے شانہ بشانہ سامنے آچکے ہیں اور انہوں نے قوم سے اپنے ایک خطاب میں سپریم کورٹ کے شانہ بشانہ ڈیمز کی تعمیر میں حکومتی حصہ ڈالنے اور اس حوالے سے مشترکہ کوششوں کا بھی اعلان کیا ہے جبکہ وزیراعظم عمران خان نے پاکستانی عوام خصوصی طور پر تارکین وطن سے ڈیمز فنڈ کیلئے عطیات جمع کرانے کی اپیل کی ہے۔ تاہم اس حوالے سے ایک ابہام پیدا ہو رہا ہے کہ آیا چیف جسٹس یا وزیراعظم میں سے کون ڈیمز کی تعمیر کی براہ راست نگرانی کرے گا کیونکہ ایک مقدمے کی سماعت کے دوران چیف جسٹس نے ریمارکس دئیے تھے کہ کہ انہیں اگر جھونپڑی لگا کر بھی وہاں رہنا پڑا تو وہ رہیں گے اور ڈیمز کی تعمیر پر پہرہ دینگے جبکہ ڈیم فنڈ کو سپریم کورٹ کی پہریداری میں قرار دیتے ہوئے چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ سپریم کورٹ ڈیم فنڈ کی پہرہ دار ہے مگر دوسری جانب پیر10ستمبر کو وزیراعظم عمران خان نے یہ کہہ دیا ہے ’’میں دیامیربھاشا ڈیم کی نگرانی کرسکتاہوں‘‘۔خیال رہے کہ کچھ روز قبل ڈیمز کے حوالے سے ایک سیاستدان کی جانب سے چیف جسٹس پر اعتراض سامنے آیا تھا جبکہ ڈیمز تعمیر کیلئے عطیات پر بھی تنقید کی گئی تھی جس پر چیف جسٹس آف پاکستان نے سخت الفاظ میں آخری وارننگ دیتے ہوئے کہا تھا کہ ڈیمز کے مخالفین کو آخری وارننگ دیتے ہوئے خبردار کر رہا ہوں کہ وہ اس کی مخالفت سے باز آجائیں۔چیف جسٹس کا کہنا تھا کہا ڈیمز کیلئے فنڈز کی اپیل کرنے پر اعتراض کرنے والے کم ظرف لوگ ہیں انہیں شرم آنی چاہئے، ہم یہ کام قومی مفاد کیلئے کر رہے ہیں۔

پاکستانی شہزادوں نے اپنی تجوریاں کھول دیں، رات گئے ڈیم فنڈ میں شاندار اضافا

اسلام آباد( مانیٹرنگ ڈیسک)چیف جسٹس ثاقب نثار اور وزیراعظم عمران خان کی اپیلیں رنگ لے آئیں، قوم کی جانب سے ڈیم فنڈ کیلئے زبردست ردعمل سامنے آگیا، اندرون و بیرون ملک پاکستانیوں نے ڈیموں کی تعمیر کیلئے تجوریوں کے منہ کھول دئیے۔ تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس ثاقب نثار اور وزیراعظم عمران خان کی ڈیم فنڈکیلئے عطیات کی اپیلیں رنگ لے آئی ہیں اور قوم کی جانب سے ڈیم فنڈ میں عطیات جمع کرانے کے حوالے سے زبردست ردعمل سامنے آیا اور اندرون و بیرون ملک پاکستانیوں نے ڈیموں کی تعمیر کیلئےتجوریوں کے منہ کھول دئیے ہیں۔ اوورسیز پاکستانیوں نے ڈیموں کی تعمیر کیلئے ایک بار پھر آگے آتے ہوئے حب الوطنی اور ملک سے اپنی وابستگی کا اظہار کرتے ہوئے سب کو حیران کر دیا ہے۔ کویت میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کی 2 ممتاز کاروباری اور سماجی شخصیات نے بھی ’’ڈیمز فنڈز ‘‘ میں ابتدائی طور پر ایک، ایک لاکھ ڈالرز دینے کا اعلان کیا ہے۔ تحریک انصاف کویت کے صدر اخلاق احمد ملک اور چیئرمین پی ٹی آئی ایگزیکٹو بورڈ پیر امجد حسین نے وزیر اعظم عمران خان کے ڈیم فنڈ زمیں ابتدائی طور پر ایک، ایک لاکھ ڈالرز دینے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہاوورسیز پاکستانی قومی خدمت کے اس عظیم الشان منصوبے کی تعمیر مِیں پورے جوش و خروش سے حصہ لیں گے،ملک کی بقا کے لئے ایک ہزار ڈالر کوئی حیثیت نہیں رکھتے بلکہ وہ تن من سے اپنے ملک کی خدمت کرنا مقدس فرض سمجھتے ہیں۔واضح رہے کہ اس سے قبل پاکستانی کی ممتاز شخصیات بھی ڈیم فنڈ میں خطیر رقم کے عطیات دے چکی ہیں۔ گزشتہ روز ملک کے معروف گلوکار عاطف اسلم نے چیف جسٹس آف پاکستان سے ملاقات کر کے انہیں 25لاکھ روپے کا چیک ڈیم فنڈ کیلئے دیا جبکہ آج پاکستان کی قومی کرکٹ ٹیم نے بھی ڈیم فنڈ کیلئے رقم دینے کا اعلان کیا ہے۔ قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمدکا میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہناتھا کہ قومی کرکٹ ٹیم ڈیم فنڈ میں 32 لاکھ روپے عطیہ دے گی،ٹیم کے ہر کھلاڑی نے 2 ،2 لاکھ روپے دیئے ہیں ،ڈیم سے آنے والی نسلیں بھی فائدہ اٹھائیں گی ۔