اشتہارات

امریکی صدر ایران سے جوہری معاہدے سے ممکنہ علیحدگی کا اعلان آج کریں گے

site_admin

واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اعلان کیا ہے کہ وہ ایران سے ہونے والے جوہری معاہدے پر فیصلہ آج سنائیں گے۔ 

امریکی صدر پاکستانی وقت کے مطابق رات 11 بجے ایران سے ہونے والے جوہری معاہدے کے ممکنہ خاتمے کا اعلان کریں گے جب کہ وہ کئی بار جوہری معاہدے سے نکلنے کی دھمکی دے چکے ہیں۔

ڈونلڈ ٹرمپ نے سماجی رابطے کی سائٹ ٹوئٹر پر ایک ٹوئٹ کے ذریعے اعلان کیا کہ وہ ایران سے ہونے والے معاہدے پر وائٹ ہاؤس میں فیصلے کا اعلان کریں گے۔

دوسری جانب ایرانی صدر حسن روحانی نے اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ دنیا کے ساتھ تعمیری تعلقات ایرانی خارجہ پالیسی کی اساس ہے اور امریکا کی جانب سے ممکنہ پابندیوں کے باوجود ایران ترقی جاری رکھے گا۔

واضح رہے کہ ایران اور عالمی طاقتوں کے درمیان 2015 میں ہونے والے جوہری معاہدے میں امریکا سمیت چین، فرانس، جرمنی، روس، برطانیہ اور یورپی یونین حصہ تھے اور امریکی صدر کو 12 مئی کو اس معاہدے کی تجدید کرنا ہے۔

تاہم ڈونلڈ ٹرمپ کئی بار معاہدے سے نکلنے کی دھمکی دے چکے ہیں جب کہ حال ہی میں فرانسیسی صدر ایمانیول میکرون سے ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس کے دوران امریکی صدر نے عالمی طاقتوں اور ایران کے درمیان جوہری معاہدے کو پاگل پن قرار دیا۔

ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا تھا کہ ہم بہت بڑا کچھ کرنے جارہے ہیں اور شاید یہ ایران سے معاہدہ بھی ہوسکتا ہے تاہم کوئی بھی نیا معاہدہ مضبوط بنیاد پر ہوگا۔

دیگر متعلقہ خبریں

اشتہارات