اشتہارات

عمران خان کا پارلیمنٹ بائیکاٹ ختم کرنے کا اعلان

mujtaba haider

پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے پارلیمنٹ کا بائیکاٹ ختم کرنے کا اعلان کیا ہے، عمران خان کی زیر صدارت پی ٹی آئی کے اجلاس میں پی ٹی آئی کے ایم این ایز کے پارلیمنٹ میں جانے کا فیصلہ کیا گیا۔

اجلاس کے بعد چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نواز شریف فوج کو پنجاب پولیس بنانا چاہتے ہیں،پارلیمنٹ کسی خاص وجہ سے جارہے ہیں، قومی اسمبلی میں ایک تحریک استحقاق اور ایک تحریک التوا لائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ نوازشریف نے دو مرتبہ پارلیمنٹ میں جھوٹ بولا، بار بار کہا جاتا ہے کہ عمران خان جمہوریت خطرے میں ڈال رہا ہے، اب دیکھتے ہیں کہ کیا پارلیمنٹ نواز شریف سے جھوٹ بولنے پر جواب طلب کرے گی ۔

عمران خان نے مزید کہا کہ ہم پاناما معاملے پرسپریم کورٹ میں کیس جیت چکے ہیں،کل پارلیمنٹ کا امتحان ہے، اگر کل جواب نہیں ملا تو نیا لائحہ عمل طے کریں گے، نوازشریف نےدو مرتبہ پارلیمنٹ میں جھوٹ بولا، نوازشریف نےاسمبلی میں کہا تھا کہ ان کے پاس تمام دستاویزات ہیں، وزیراعظم پارلیمنٹ میں کچھ اورکہتے ہیں اورسپریم کورٹ میں کچھ اور۔

انہوں نے کہا کہ عدالت میں وکلاء نے کہا کہ وزیراعظم نے پارلیمنٹ میں سیاسی بیان دیا،اب دیکھتے ہیں کہ پارلیمنٹ وزیراعظم سے جواب طلب کرتی ہے؟کیا پارلیمنٹ میں صرف حاضریاں لگانی ہوتی ہیں؟پارلیمنٹ میں اپوزیشن کا کام تالیاں بجانا نہیں، حکومت سے جواب طلب کرنا ہوتا ہے،اگراسمبلی میں وزیراعظم جھوٹ بولتے ہیں توانکی کونسی بات مانیں گے، اسپیکرقومی اسمبلی درباری ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ سپریم کورٹ نے کہا کہ ادارے فیل ہوچکے ہیں،جب ادارےفیل ہوجاتے ہیں توہم سڑکوں پرنکلتے ہیں،نوازشریف نے سارے ادارے ختم کردیے، حکومت کہتی ہے کہ پرندوں کو مروانا ہماری خارجہ پالیسی کا حصہ ہے، نوازشریف نے سارے اداروں میں اپنے لوگ بٹھا دیے، بتایا جائے الیکشن کمیشن پر کس کو اعتماد ہے۔

دیگر متعلقہ خبریں

اشتہارات